ac mandi bahauddin

اسسٹنٹ کمشنر کا چھاپہ، غیر قانونی طور پر گیس کی بھرئی کرنے پر ایجنسی سیل

ڈپٹی کمشنر تسنیم علی خاں کی ہدایت پراسسٹنٹ کمشنر منڈی بہاوالدین محمد عثمان امین نے گورنمنٹ ہائی سکول جھولانہ اور بنیادی مرکز صحت مانگٹ کااچانک دورہ کیا، اسسٹنٹ کمشنر نے اپنے دورے کے آغاز کے دوران سکول کے مختلف شعبوں، کلاس رومز، لیب کے علاوہ اساتذہ اور سٹاف کی حاضری، صفائی ستھرائی اور دیگر انتظامات کا تفصیلی جائزہ لیا اور ضروری ہدایات بھی جاری کیں۔

منڈی بہاﺅالدین ( ایم.بی.ڈین نیوز 19دسمبر 2022) انہوں نے سکول کے مختلف کلاس رومز میں جا کر طلباءکو تعلیم حاصل کرتے دیکھا اور طالب علموں سے سوالات بھی کئے ۔ اس موقع پر ہیڈ ماسٹر، اساتذہ کرام اور دیگر بھی موجود تھے۔اسسٹنٹ کمشنر محمد عثمان امین نے کہا کہ تعلیم کا فروغ پنجاب حکومت کا بنیادی ایجنڈہ ہے اور میعاری تعلیم کی بہتری اور مقرر کردہ تعلیمی اہداف کے حصول کیلئے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں۔محکمہ تعلیم کے اساتذہ اور افسران اپنی ذمہ داریوں کے احساس کرتے ہوئے نسل نو کی آبیاری میں کسی قسم کی کسر اٹھا نہ رکھیں۔

اسسٹنٹ کمشنر نے بنیادی مرکز صحت مانگٹ کا دورہ بھی کیا، دورے کے دوران انہوں نے ڈاکٹر اور طبی عملے کی حاضری سمیت ہسپتال کے وارڈز، فارمیسی اورصفائی ، ستھرائی کا جائزہ لیا۔ انہوں نے صفائی ستھرائی سمیت دیگر امورز کو بہتر بنانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہاکہ پنجاب حکومت صحت کے شعبے میں انقلابی اقدامات کر رہی ہے لہذا مریضوں کیلئے بہترین طبی سہولیات کی فراہمی کیلئے ہر ممکن وسائل بروئے کار لائے جائیں ۔

ہسپتال میں مریضوں کے لئے تمام ضروری ادویات مفت موجود ہیں۔ کسی شکایت کی صورت میں فوری ازالہ ہونا چاہیئے۔دریں اثناء اسسٹنٹ کمشنر نے ست سرا پر قائم غیر قانونی ایل پی جی ایجنسی پر چھاپہ مار ا اور ایل پی جی کی بھرائی کرنے پردکان کو سیل کرکے دکاندار کو تھانہ سول لائن میں بند کر ادیا ۔

اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر نے کہا کہ غیر قانونی طور پر قائم ایل پی جی اور پٹرول ایجنسیاں قواعد و ضوابط اور حفاظتی اقدامات سے ہٹ کر قائم کی جاتی ہیں جو کہ کسی بھی وقت کسی حادثے کا موجب بن سکتی ہیں ۔ انہوں نے غیر قانونی پٹرول ایجنسیز اور ایل پی جی بھرائی مالکان کو کو سختی سے ہدایت کی کہ وہ ایسے غیر قانونی افعال سے باز رہیں ۔ چیکنگ کے دوران خلاف ورزیوں کے مرتکب پائے جانے والوں کو بھاری جرمانے کئے جائیں گے اور انہیں جیل کی ہوا بھی کھانی پڑے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں