office

پنشن میں 10 فیصداضافے اورکم از کم تنخواہ 25 ہزار مقررکرنے کا نوٹی فکیشن جاری

اسلام آباد: وزارت خزانہ کی جانب سے سول سرکاری ملازمین کی پنشن میں 10 فیصد اضافے اور کم از کم اجرت 25 ہزار روپے کا نوٹی فکیشن جاری کردیا گیا۔

وزارت خزانہ کے جاری کردہ نوٹی فکیشنز میں بتایا گیا ہے کہ سول ملازمین پنشن میں اضافے کا اطلاق یکم اپریل 2022 سے کیا گیا ہے دفاعی بجٹ سے پنشن لینے والے سول ملازمین پر بھی پنشن میں اضافے کا اطلاق ہوگا اس کے علاوہ وزارت خزانہ نے سول سرکاری ملازمین کی کم از کم اجرت 25 ہزار روپے مقرر کرنے کا نوٹی فکیشن بھی جاری کردیا ہے۔

جس میں بتایا گیا ہے کہا کہ دفاعی بجٹ سے پنشن لینے والے سول ملازمین پر بھی کم ازکم اجرت میں اضافے کا اطلاق ہوگا، کم از کم اجرت کا اطلاق بھی یکم اپریل 2022 سے کیا گیا ہے اورکم از کم اجرت کا اطلاق عارضی ملازمین اور کنٹریکٹ ملازمین پر بھی ہوگا۔

وزارت خزانہ کے جاری کردہ نوٹی فکیشن مطابق 25ہزارروپے سے کم اجرت لینے والے سول ملازمین کو باقی رقم ڈیفرنشل الاونس کی مد میں لے گی، ڈیفرنشل الاونس کی مد میں ملنے کی رقم پر انکم ٹیکس لاگو ہوگا، سول ملازمین کو رخصت کے دوران اور ایل پی آر کے دوران بھی یہ الاونس ملے گا۔

نوٹی فکیشن کے مطابق غیر معمولی رخصت پر یہ الاونس نہیں ملے گا، ہاوس رینٹ،گریجویاٹی اور پنشن کے تعین کے لیے ڈیفرنشل الاونس کی رقم کو شامل نہیں کیا جائے گا، سول ملازمین کی ڈیپوٹیشن پر بیرون ملک تعیناتی پر ڈیفرنشل الاونس نہیں ملے گا البتہ بیرون ملک سے واپسی پر سول ملازمین کو الاونس ملے گا اس الاونس کی ادائیگی کے لیے وزارتوں اور ڈویژنوں کو کوئی اضافی سپلمنٹری گرانٹ جاری نہیں کی جائے گی۔

خیال رہے کہ نومنتخب وزیراعظم شہباز شریف نے کم ازکم ماہانہ تنخواہ 25 ہزار روپے کرنے کا اعلان کردیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں