loan

پی ٹی آئی حکومت نے سالانہ 9.174ارب ڈالر سود اور قرض واپس کیا

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کی وفاقی حکومت نے اپنے دورمیں اوسطاً سالانہ 9.174 ارب ڈالر سود اورقرضے کی مد میں ادائیگی کی جب کہ (ن)لیگ نے اپنے 5سالہ دور میں اوسطاً سالانہ 5.414 ارب ڈالر سود اور قرضے کی مد میں ادا کیے تھے۔

پی ٹی آئی حکومت نے اگست2018 سے اکتوبر2021 تک 38.8 ارب ڈالر غیر ملکی قرضہ لیا جبکہ اسی عرصہ کے دوران پی ٹی آئی حکومت نے 29.815ارب ڈالر غیر ملکی قرضے واپس کیے۔ دستاویزات کے مطابق یکم اگست 2018 تا 31 اکتوبر 2021 تک حکومت پاکستان نے غیر ملکی قرضوں اور گرانٹس کی صورت میں مجموعی طورپر 38.8 ارب ڈالر لیے، جس میں قرضے کی مد میں 37.857 ارب ڈالر جبکہ گرانٹس کی مد میں 1.007 ارب ڈالر وصول کئے۔

اگست 2018سے اکتوبر2021 تک 39 مہینوں میں وفاقی حکومت نے 29.815ارب ڈالر اصل زر اور سود کی مد میں (اوسطاً 9.174 ارب ڈالر سالانہ) ادائیگیاں کیں، جولائی2013 سے جون2018 تک 5سال میں (ن)لیگ نے 49.762 ارب ڈالر غیر ملکی قرضے لیے جبکہ 5 سالوں میں 27.071 ارب ڈالر غیر ملکی قرضہ واپس کیا۔

پانچ سالوں میں (ن) لیگ حکومت نے 22.691 ارب ڈالر خالص قرضہ حاصل کیا اور 27.071 ارب امریکی ڈالر (اوسطاً سالانہ5.414 ارب ڈالر) غیر ملکی قرضہ واپس کیا.

اپنا تبصرہ بھیجیں