ڈرگ ایکٹ کی خلافورزی پر 5میڈیکل سٹور مالکان کے خلاف مقددمات ڈرگ کورٹ بھیجنے کا حکم

ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل محمد شفیق نے5 میڈیکل سٹور مالکان کے خلاف مقدمات ڈرگ کورٹ بھیجنے کا حکم دے دیا ۔ اس امر کا فیصلہ ڈی سی آفس میں ان کی زیر صدارت ڈسٹرکٹ کوالٹی کنٹرول بورڈ کے اجلاس میں کیا گیا۔

منڈی بہاؤالدین( ایم.بی.ڈین نیوز 9 ستمبر 2021) اجلاس میں سی او ہیلتھ ، ڈرگ کنٹرولرعظمیٰ مظہروڑائچ، سیکرٹری کوالٹی کنٹرول بورڈ عطاء المصطفیٰ، ممبر کمیٹی ڈاکٹر ارشد تنویر اور ڈرگز انسپکٹرز بھی موجود تھے۔اجلاس میں ڈرگ ایکٹ کی خلاف ورزی کے مرتکب 24 میڈیکل سٹورز مالکان کے کیسز پیش کئے گئے ۔ جن پر بغیر لائسنس ، بغیر وارنٹی، زائدالمیعاد، غیر رجسٹرڈ ادویات رکھنے اور ادویات کا ریکارڈ نہ رکھنے ، صفائی سھترائی اور فریزر میں ادویات نہ رکھنے وغیرہ ایسے الزامات تھے۔

اجلاس میں تمام میڈیکل سٹورز مالکان کو اپنی صفائی پیش کرنے کا فرداً فرداً موقع دیا گیا۔ جس پر اجلاس میں بورڈ کے متفقہ فیصلے کی روشنی میں 5 میڈیکل سٹورز مالکان کے مقدمات ڈرگ کورٹس بھیجنے جبکہ 13میڈیکل سٹورز کو وارننگ اور 6 کو از سر نو معائنہ کرنے کے احکامات جاری کئے گئے۔ اس موقع پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل نے کوالٹی کنٹرول بورڈ کے ممبران کو ہدایت جاری کرتے ہوئے کہا کہ میڈیکل سٹور مالکان کو اس بات کا پابند کیا جائے کہ وہ حساس ادویات کو ریفریجریٹر یا ائیر کنڈیشن میں محفوظ کریں اوروہ ادویات کی خرید وفروخت کا مکمل ریکارڈ اور وارنٹی ضرور رکھیں۔کسی میڈیکل سٹور پر زائد المیعاد ادویات نہیں ہونی چاہئیں۔

انہوں نے واضح کیا کہ کوالیفائیڈ شخص کے بغیر کوئی میڈیکل سٹور یا کلینک کام نہیں کر سکتا۔ نان کوالیفائیڈ حکیموں اور عطائیوں کا اپنی تشہیری مہم چلانا بھی غیرقانونی ہے۔ انہوں نے ڈرگ انسپکٹر ز کو واضح ہدایت جاری کرتے ہوئے کہا کہ وہ روزانہ کی بنیاد پر میڈیکل سٹور پر ڈرگ ایکٹ کے قوانین کے مطابق معائنہ کریں اور خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف فوراََ کاروائی کریں۔انہوں نے کہا کہ محکمہ صحت اور ڈرگ کنٹرولر کی ٹیمیں عطائیوں کا قلع قمع کرنے کیلئے اپنی کارروائیاں جاری رکھیں اور ڈرگ ایکٹ پر سو فیصد عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں