منڈی بہاوالدین شہر میں قائم غیر قانونی پٹرول پمپس اور آئل ایجنسیز کے خلاف بلا امتیاز کریک ڈاﺅن کا آغاز کر دیا گیا

منڈی بہاو الدین( ایم.بی.ڈین نیوز 29ستمبر2020 )ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل محمد شفیق نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت کی ہدایت پر شہر میں قائم غیر قانونی پٹرول پمپس اور آئل ایجنسیز کے خلاف بلا امتیاز کریک ڈاﺅن کا آغاز کر دیا گیا ہے،انہوں نے واضح کیا کہ ان کارروائیوں کا مقصد شہریوں کو کسی بھی قسم کے ممکنہ حادثے سے تحفظ فراہم کرنا ہے جس کو پورا کرنے کیلئے ضلعی انتظامیہ ہر حد تک جائے گی۔

ان خیالات کااظہار انہوں نے آج یہاں ڈپٹی کمشنر آفس میں ڈسٹرکٹ پٹرول پمپس کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں اسسٹنٹ کمشنر منڈی بہاﺅالدین ملک کاشف نواز، ڈی او انڈسٹریز رانا گلفام حیدر، سی او میونسپل کمیٹی منڈی بہاﺅالدین طاہر ندیم سندھو، سی او میونسپل کمیٹی پھالیہ عرفان گوندل، سی او میونسپل کمیٹی ملکوال بشیرتارڑ، رضوان بشیر آغا،سول ڈیفنس آفیسر علی عمران اور دیگر متعلقہ محکموں کے افسران نے شرکت کی۔

قبل ازیںڈی او انڈسٹریز رانا گلفام نے اجلاس کو بتایا کہ صوبائی حکومت نے تمام اضلاع کی انتظامیہ کو اپنے اپنے اضلاع میں قائم غیر قانونی پٹرول پمپس، آئل ایجنسیز، ایل پی جی سٹوریجز اور ڈبہ سٹیشنز کے خلاف پٹرولیم ایکٹ 1934اور 1937کی دفعہ 131کے تحت کارروائی کرنے اور سیل کرنے کی ہدایت کی ہے جس پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر نے بتایا کہ ضلعی انتظامیہ نے اسسٹنٹ کمشنر منڈی بہاﺅالدین کی سربراہی میں ڈی او انڈسٹریز اورسول ڈیفنس آفیسر پر مشتمل تین رکنی کمیٹی تشکیل دے دی ہے جو ضلع بھر میں قائم غیر قانونی پٹرول پمپس، آئل ایجنسیز، ایل پی جی سٹوریجز اور ڈبہ سٹیشنز کے خلاف نا صرف کریک ڈاﺅن کرے گی بلکہ پٹرولیم ایکٹ کے تحت ان کو سیل کر کے رپورٹ صوبائی انتظامیہ کو بھجوائے گی۔

انہوں نے کہا کہ غیر قانونی طور پر قائم پٹرول پمپس ، آئل ایجنسیز، ایل پی جی سٹوریجز اور ڈبہ سٹیشنز نے متعلقہ حکام سے کسی بھی قسم کا اجازت نامہ نہیں لیا ہوتا ہے اور ان کے پاس محفوط طریقے سے کاروبار کرنے کا بنیادی ڈھانچہ بھی نہیں ہوتا جس کی وجہ سے اس طرح کی تنصیبات کسی بھی وقت ممکنہ حادثے کا سبب بن سکتی ہیں۔جس کے پیش نظر صوبائی حکومت نے مفاد عامہ کے تحفظ کو پیش نظر رکھتے ہوئے ایسی تنصیبات کے خلاف کریک ڈاﺅن کرنے اور سیل کرنے کا حکم دیا ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں