آئسولیشن سنٹر منڈی بہاؤالدین میں مریضوں کے ساتھ جانوروں سے بھی بدتر سلوک انتظامیہ ناکام

منڈی بہاوالدین (نیوزڈیسک )کورونا کے مریضوں کا مثبت ٹیسٹ آنے والوں کے ساتھ جانوروں سے بھی بدتر سلوک آئسولیشن میں کھانا نہ پانی ۔سوکھی ہوئی روٹیاں محکمہ صحت کے ملازمین کو بھی نہ بخشا گیا چیف جسٹس سپریم کورٹ آف پاکستان سے نوٹس لینے کا مطالبہ.

تفصیلات کے مطابق پورے ملک کی طرح منڈی بہاوالدین میں بنایا جانے بنایا جانے والا آئسولیشن سنٹر کورونا کے مثبت ٹیسٹ آنے والے مریضوں کے لیے وبال جان بن گیا آئسولیشن سنٹرمیں جیل سے بھی بدتر ماحول ایسا سلوک تو جیل کے قیدیوں کے ساتھ بھی نہیں کیا جاتا ہے جیسا کہ آئسولیشن سنٹر منڈی بہاوالدین میں کیا جارہا ہے گزشتہ دنوں تحصیل ہیڈکوارٹرہسپتال پھالیہ کے تین ملازمین ڈاکٹر لئیق الرحمن۔محمد خان منیر اور قیصر بٹ کاکورونا کا مثبت ٹیسٹ آنے پر انہیں فوری طور پر آئسولیشن وارڈ منڈی بہاوالدین منتقل کردیا گیا.

حالانکہ ہسپتال کے ملازمین کو ہسپتال میں ہی قرنطینہ کر دینا چاہیے تھا ۔آئسولیشن وارڈ منڈی بہاوالدین میں حالات انتہائی خراب ہیں نہ کھانے کا انتظام نہ پانی کا نہ واش روم میں پانی آئسولیشن سنٹر میں گندگی ہی گندگی ۔نہ ڈیوٹی ڈاکٹر نہ سٹاف نرس جبکہ دوسری جانب کھانے میں سوکھی روٹیاں دے کر جانوروں سے بھی بدتر سلوک کیا جارہا ہے جو کہ ضلعی انتظامیہ اور محکمہ صحت ضلع منڈی بہاوالدین کے منہ پر تماچہ ہے.

یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ آئسولیشن سنٹر محکمہ صحت کے کنٹرول میں نہیں بلکہ ایک اہم ادارے کے کنٹرول میں ہے یہ بھی معلوم ہوا ہے کے اہم ادارے سے تعلق رکھنے والے سات افراد کو کورونا ہوا جنہیں گھروں میں آئیسولیٹ کیا گیا ہے جبکہ محکمہ صحت کے ملازمین کے ساتھ دوہرا معیار برتا جارہا ہے فرنٹ لائن پر جنگ لڑنے والے محکمہ صحت کے ڈاکٹرز اور سٹاف کے ساتھ ایسا برا سلوک کیا جائے تو عام انسانوں کا کیا حال ہوگا .

جبکہ دوسری جانب چیف جسٹس سپریم کورٹ آف پاکستان جسٹس گلزار احمد نے کورونا ازخود کیس میں ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ کورونا کے ایک مریض پر 25 لاکھ روپے کا خرچہ ظاہر کیا جا رہا ہے عدالت کو بتایا جائے کہ پچیس لاکھ روپیہ کہاں خرچ ہو رہا ہے.

عوامی سماجی حلقوں ہے چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس گلزار احمد ۔چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ ۔گورنر پنجاب۔ وزیر اعلی پنجاب۔چیف سیکرٹری پنجاب ۔صوبائی وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد سیکرٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر پنجاب ۔کمشنر گوجرانوالہ اور ڈپٹی کمشنر منڈی بہاوالدین سے انسانیت کے نام پر اپیل کی ہے خدارا آئسولیشن سنٹر منڈی بہاوالدین میں سہولیات نہ ہونے کا فوری نوٹس لیا جائے اور محکمہ صحت کے ملازمین کو فوری طور پر تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال پھالیہ میں شفٹ کیا جائے تاکہ ریلیف مل سکے.

اگر ایسا نہ کیا گیا تو آئسولیشن سنٹر منڈی بہاؤالدین میں مریض ٹھیک ہونے کے بجائے مزید ذہنی اذیت کا شکار ہوں گے جس کی تمام تر ذمہ داری ضلعی انتظامیہ منڈی بہاؤالدین اور محکمہ صحت کے حکام پر عائد ہوگی

اپنا تبصرہ بھیجیں