کنگ چوک تا لیدھر54کروڑ کی لاگت سے بننے والی سڑک کی تعمیر تیزی سے جاری ہے، ممتاز تارڑ

Sargodha road mandi bahauddinمنڈی بہاؤالدین ( نامہ نگار) کنگ چوک تا لیدھر54کروڑ کی لاگت سے بننے والی سڑک کی تعمیر تیزی سے جاری ہے ‘ اہلیان جھولانہ و مانگٹ کی 30سالہ شکایت کا ازالہ کر دیا ہے ‘ اب حلقہ این اے 108کی ہر سڑک موٹروے کے معیار کی تعمیر ہو گی ‘ حلقہ کی محرومیوں کا ازالہ کر کے علاقہ کو ترقی کا گہوارہ بنا دیں گے ‘ اگلے ماہ منڈی بہاؤالدین کو کئی میگا پروجیکٹس کا سرپرائز دونگا ‘ ان خیالات کا اظہار ممبر قومی اسمبلی ممتازاحمد تارڑ نے زاہد فراز تارڑ چیئرمین یوسی سیدا ‘ حاجی نذیراحمد مانگٹ ‘ ذوالفقار مانگٹ ‘ چوہدری مختاراحمد بہاول کا ‘ اشرف مانگٹ نمبردار ‘ رستم نواب لک ایڈووکیٹ ‘ عرفان نواز رانجھا ‘ عزت رسول ‘ مرزاخالد محمود ‘ افضال احمد بھٹی کے ہمراہ مانگٹ کے مقام پر منڈی بہاؤالدین تا پھالیہ ڈوئل کیرج وے کی تعمیر اور کام کی رفتار کا جائزہ لینے کیلئے اسپیشل وزٹ کے دوران میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ‘ انہوں نے مزید کہا کہ انجینئرنگ یونیورسٹی کا قیام اور ڈی ایچ کیو ہسپتال کی تعمیر بنیادی ایشوز ہیں ان پر جلد خوشخبری دینگے ‘ پاہڑیانوالی ‘ مانو چک ‘ جانو چک ‘ ہیگر والا سمیت تحصیل پھالیہ کے 8بڑے دیہاتوں میں سوئی گیس کی فراہمی کا افتتاح ہوچکا ہے جلد ہی مزید دیہاتوں میں بھی سوئی گیس فراہم کر دی جائے گی ‘ انہوں نے مزید کہا کہ حلقہ کی تمام سڑکوں کی تعمیر میں میٹریل پر کوئی کمپرومائز نہیں کیا جائیگا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں