اجووال میں بجلی نایاب، واپڈا نے صارفین کو پتھر کے دور میں دھکیل,صارفین عذاب میں مبتلا

Loadsheding bulb lightملک وال(نامہ نگار) گیپکو کے سب ڈویژن گوجرہ کے فیڈر گوہڑ شریف کے علاقہ اجووال میں تمام تر حکو متی دعووں اور وعدوں کے برعکس بجلی کی پہروں بندش نے صارفین کو عذاب میں مبتلا کیا ہوا ہے۔ رمضان المبارک کا مہینہ شروع ہوتے ہی غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ کا نہ ختم ہونے والا سلسلہ شروع ہو چکا ہے۔ سحر و افطار کے وقت اور نمازوں کے اوقات میں بجلی بند کر دی جاتی ہے جس سے روزہ داروں کو شدید کرب سے گزرنا پڑتا ہے۔ صارفین انور، تجمل، منیر، ذکی سمیت دیگر نے بتایا کہ منگل کی رات نماز تراویح سے پہلے بجلی بند کر دی گئی جو کہ بدھ کے روز دن گیارہ بجے قریباً چودہ گھنٹے بعد بحال کی گئی جبکہ اس دوران ایس ڈی او گوجرہ اور ایکسین پھالیہ کے سرکاری نمبروں پر متعدد بار رابطہ کرنے کی کوشش کی گئی مگر کسی نے فون اٹھانے کی زحمت تک گوارا نہ کی۔ جس کے بعد بدھ کے روز صبح ساڑھے آٹھ بجے گیپکو کے ہیڈ آفس گوجرانوالہ میں رابطہ کیا گیا تو انہیں بتایا گیا کہ فیڈر گوہڑ شریف گرڈاسٹیشن سے چل رہا ہے اور بجلی ٹرانسفارمر سے جمپر اتار کر منقطع کی گئی ہے۔ جس کے بعد صارفین نے ایس ای عبدالرزاق سے رابطہ کیا تو موصوف نے ایکسین پھالیہ کو ہدایت کی کہ فوری طور پر مذکورہ علاقہ کی بجلی بحال کی جائے۔ نماز تراویح اور سحر کے اوقات سمیت چودہ گھنٹے کی مسلسل بندش کے بعد بجلی بحال کی گئی۔ شہریوں کا کہنا تھا کہ پہروں بجلی کی یہ بندش جان لیوا گرمی میں اذیت ناک ہے اور گیپکو ملازمین کی نااہلی و صارفین دشمنی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ انہوں نے گیپکو چیف اور دیگر متعلقہ حکام سے نوٹس لے کر نااہل واپڈا افسران اور اہلکاروں کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں