استاذ معاشرہ کا معزز ترین طبقہ ہے لیکن حکومت نے اپنی ناقص پالیسیوں سے انہیں ذلیل ترین طبقہ بنا دیا ہے

education
ملک وال(نامہ نگار) پنجاب حکومت نے صوبہ میں تعلیمی نظام تباہ کر دیا ہے استاذ معاشرہ کا معزز ترین طبقہ ہے لیکن حکومت نے اپنی ناقص پالیسیوں سے انہیں ذلیل ترین طبقہ بنا دیا ہے قوموں کی ترقی میں استاذ کا کردار اہم ہے حکومت انہیں سڑکوں پر ذلیل کرنے کی بجائے فوراٌ ان کا حق دے ان خیالات کا اظہار تنظیم شان پاکستان کے صدر نسیم اکمل خان نے پریس کلب میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ تنظیم شان پاکستان کے صدر نسیم اکمل خان نے کہا کہ ترقی یافتہ معاشروں میں حکمرانوں سمیت تمام ادارے استاذ کا بے حد احترام کرتے ہیں انہیں مکمل معاشی تحفظ دیا جاتا ہے تاکہ وہ مکمل یکسوئی سے تعلیم پر توجہ دے لیکن ہمارے معاشرے میں اساتذہ کی تنخواہیں اس قدر کم ہیں کہ وہ اپنی تعلیمی سرگرمیوں کی طرف صحیح توجہ نہیں دے پاتے انہوں نے کہا کہ اب پنجاب حکومت نے ایسی پالیسیاں بنا لی ہیں کہ ٹیچرز احساس کمتری کا شکار ہو گئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ حکمران اپنی تنخواہوں میں تو کئی گنا اضافہ خود ہی کر لیتا ہیں لیکن پہلے ہی وہ ملکی خزانوں اور وسائل کو لوٹ کر ارب پتی بن چکی ہیں لیکن عام ملازم طبقہ کی تنخواہوں میں اضافہ کے وقت خزانہ میں کمی کا بہانہ بنا لیتے ہیں شان پاکستان کے رہنما نے کہا کہ حکومت کو اپنا رویہ درست کرنا ہو گا ٹیچر کو معاشرہ میں باعزت مقام دینا ہو گا جس کیلئے سب سے پہلے ضروری ہے کہ ان کی تنخواہیں مہنگائی کے تناسب سے بڑھائی جائیں تاکہ وہ معاشی پریشانیوں میں مبتلا نہ ہوں ۔۔۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں