دریائے جہلم پر پل کی تعمیر نہ ہونے کیخلاف میلاد چوک سے پریس کلب تک احتجاجی ریلی

Malakwal map
ملک وال(نامہ نگار) پل بناؤ تحریک کی اپیل پر دریائے جہلم پر پل کی تعمیر نہ ہونے کیخلاف میلاد چوک سے پریس کلب تک احتجاجی ریلی ، مسلم لیگ ن ، پیپلز پارٹی ، تحریک انصاف ، ق لیگ، جماعت اسلامی کے رہنماؤں و کارکنوں سمیت سینکڑوں شہریوں کی ریلی میں شرکت۔ تفصیلات کیمطابق پل بناؤ تحریک ملک وال کے زیر اہتمام میلاد چوک سے ریلی نکالی گئی جس کی قیادت پل بناؤ تحریک کے سربراہ سابق امیدوار حلقہ پی پی 119 اکبر علی گوگا نے کی ۔ ریلی میں سابق ناظمین ملک عبدالرشید شاہین ، راجہ خرم حیات، کونسلرز قمر خان ، معین خان، جعفر شاہ، مسلم لیگ ن کے صدر شاہد حسین شاہ، یوتھ ونگ پنجاب کے نائب صدر اصغر یعقوب سندھو،پیپلز پارٹی کے صدر رانا محمد عارف ، تحریک انصاف کے سابق صدر شراکت علی شہزاد ، قیصر نواز لالیکا ، ق لیگ کے حمید اﷲ جماعت اسلامی کے پروفیسر انصار احمد، رانا عابد علی سمیت سینکڑوں شہریوں نے شرکت کی ۔ ریلی کا آغاز میلاد چوک سے ہوا شرکا نے بینرز اور پلے کارڈ ز اٹھا رکھے تھے جن پر ملک وال کی مجبوری ہے پل بہت ضروری ہے کے نعرے درج تھے۔ریلی شہر کی مختلف شاہراہوں سے ہوتی ہوئی پریس کلب پہنچی جہاں شرکا سے خطاب کرتے ہوئے پل بناؤ تحریک کے سربراہ اکبر علی گوگا نے کہا کہ ملک وال اور پنڈدادنخان میں تمام سیاسی جماعتوں کے سیاستدان گزشتہ 30سالوں سے چک نظام کے مقام پر دریائے جہلم پر پل بنانے کے وعدے کر کے ہم ووٹ لیتے رہے جبکہ سابق صدور مملکت پرویز مشرف نے پنڈدادنخان میں ، آصف زرداری نے ملک وال میں میں جبکہ سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی نے گوجرہ میں اس پل کے افتتاح کئے لیکن آج تک اس پل کی تعمیر بھی شروع نہ ہو سکی۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے اگر دو سال میں یہ پل نہ بنایا تو کسی بھی سیاستدان کو ملک وال میں ووٹ مانگنے نہیں دیں گے اب ہم مزید بیوقوف نہیں بنیں ۔ اس موقع پر مسلم لیگ ن کے سٹی صدر شاہد حسین شاہ اور یوتھ ونگ پنجاب کے نائب صدر اصغر یعقوب سندھو نے کہا کہوزیر اعظم میاں نواز شریف نے پل کی منظوری دیدی ہے وزیر اعظم آئندہ دو ماہ تک وزیر اعظم ملک وال کا دورہ کر کے پل کے فنڈز کا خود اعلان کریں گے اور اس کا تعمیراتی کام شروع ہو گا۔۔۔۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں