سرکاری سکولوں کی نجکاری پر پنجاب ٹیچرز یونین نے 17مئی کو مکمل ہڑتال اور سکولوں کی تالہ بندی کا اعلان کر دیا

protest strike peoples
ملک وال(نامہ نگار) پنجاب ٹیچرز یونین کے ضلعی نائب صدر راجہ ذوالفقار علی نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب حکومت نے پیک امتحان سے قبل پنجاب بھر کے اساتذہ کے احتجاج پر پی ٹی یو کے مطالبات ماننے کا اعلان کیا تھا لیکن امتحانات کے بعد حکومت اپنے وعدوں سے منحرف ہو گئی اور اب صوبہ بھر کے سرکاری سکولوں کو پرائیویٹائز کرنے کا عمل تیزی سے جاری ہے جس سے پنجاب بھر کے اساتذہ میں شدید اضطراب پایا جاتا ہے انہوں نے کہا کہ فلاحی ریاست قوم کے بچوں کو تعلیمی سہولتیں خود فراہم کرتی ہے لیکن پنجاب حکومت کسی خفیہ ایجنڈے کے تحت پنجاب سے تعلیمی نظام کو سرکاری سطح پر ختم کرنے پر تلی ہوئی ہے حکومت اگر تعلیم دشمن پالیسیوں سے باز نہ آئی تو دمادم مست قلندر کریں گے ۔ راجہ ذوالفقار علی نے کہا کہ حکومت کی تعلیم و ٹیچر دشمنی پالیسی کیخلاف 17مئی سے پنجاب بھر میں تحریک شروع کی جارہی ہے 17مئی سے سکولوں کی تالہ بندی کر کے احتجاجی تحریک شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے انہوں نے کہا کہ 17مئی کو ضلع بھر کے سکول بند کر کے گورنمنٹ ہائی سکول سوہاوہ بولانی سے ڈی سی او دفتر تک احتجاجی ریلی نکالی جائے گی۔۔۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں