حکومتی ڈینگی پالیساں نعروں تک محدود۔سکول کے سامنے گندے پانی کا جوہڑ طلبا ء کے لیے وبال جان بن گیا

GPS Main Malakwal
ملک وال (نامہ نگار) حکومتی ڈینگی پالیساں صرف نعروں تک محدود سکول کے سامنے گندے پانی کا جوہڑ طلبا ء کے لیے وبال جان بن گیا گورنمنٹ پرائمری سکول ملک وال کے ننھے طلباء بھی احتجاج پر اتر آئے کئی سالوں سے سکول کے سامنے ریلوے کے گندے تالاب کو صاف نہیں کیا گیا بدبو ہونے کے باعث اساتذہ اور طلباء کو شدید مسائل کا سامنا۔ تفصیلا ت کیمطابق محلہ صابری میں 120سال قدیم اور ملک وال کا پہلا گورنمنٹ مین پرائمری سکول جس کے سامنے 1ایکڑ کے قریب ریلوے اراضی خالی ہے جس میں علاقہ بھر کا گندہ پانی جمع ہو تا ہے اور عرصہ دراز سے گندہ پانی جمع ہو کر جوہڑ کی شکل اختیار کر گیاجبکہ حکومت پنجاب کی طرف کروڑوں روپے کے فنڈز ڈینگی بچاؤ کی آگاہی مہم پر خرچ کیے جا رہے ہیں جن میں واضح بتایا جاتا ہے کہ ڈینگی جیسے خطرناک مچھر کی افزائش نسل کھڑے پانی میں ہوتی ہے تو کئی سالوں سے کھڑا گند ا پانی سکول کے بالکل سامنے ہے مگرا نتظامیہ نے سکول کے طلباٗ کو لاحق خطرے کو مٹانے میں کوئی کردار ادا نہیں کیا پرائمری سکول کے ننھے منھے طلباء سکول کے سامنے احتجاج کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف سے مطالبہ کیا ہمارے سکول کے سامنے سے گندے جوہڑ کو ختم کروا کر ہمیں ڈینگی جیسی خطرناک بیماریوں سے محفوط کیا جائے۔ یاد رہے کہ ممبر پنجاب اسمبلی شفقت محمود گوندل نے سکول انتظامیہ سے وعدہ کیا تھا کہ وہ اس جوہڑ میں مٹی ڈلوا کر اسے بھر دیں گے لیکن ابھی تک وعدہ ایفا نہیں کیا گیا۔۔۔۔۔ ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں