بار ایسوسی ایشن ملک وال کے دو وکلا گروپوں میں صلح ہو گئی ، 9، اپریل کے بار الیکشن میں ظفر اقبال ہطار کو مشترکہ امیدوار لانے کی توقع

salam joining hands
ملک وال(نامہ نگار) سابق صدر بار تصور نوید گوندل گروپ کے سابق صدور غلام رسول اور شعیب احمد گھیگا گروپ میں چند ماہ قبل شدید اختلافات ہو گئے تھے یہاں تک کہ نوبت فوجداری مقدمات درج کروانے تک پہنچ گئی۔ 9جنوری کے الیکشن میں غلام رسول گوندل اور شعیب گھیگا گروپ کے امیدوار ظفر اقبال ہطار نے صدارت کے الیکشن میں تصور نوید گوندل کو شکست دیدی تھی جس کے بعد اختلافات کے باعث الیکشن بورڈ نے ظفر اقبال ہطار کی بجائے تصور نوید گوندل کو صدر بار منتخب ہونے کا نوٹیفیکیشن جاری کر دیا ۔ جس پر معاملہ پنجاب بار کونسل اور پھر پاکستان بار کونسل میں چلا گیا ۔ پاکستان بار نے بار ایسوسی ایشن ملک وال کے 9جنوری کو ہونے والے الیکشن کو کالعدم قرار دے کر 9، اپریل کو دوبارہ الیکشن کروانے کا حکم دیدیا ۔ تاہم سینئر وکلا کی کوششوں کے بعد گزشتہ روز دونوں گروپوں میں صلح ہو گئی ۔ جس کے بعد امید کی جا رہی ہے کہ 9اپریل کے الیکشن میں امیدواروں کی درخواستیں باہمی مشاورت سے دی جائیں اور تمام پینل بلا مقابلہ منتخب کروایا جائے ۔ جبکہ ظفر اقبال ہطار کو بار صدر منتخب کروائے جانے کی توقع ہے ۔۔۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں