سابقہ پولیس ملازم ڈکیتی کرتے ہوئے شہری کے گارڈ کی فائرنگ سے ہلاک، دو ڈاکو فرار

firing pistal
ملک وال(نامہ نگار) سابقہ پولیس ملازم ڈکیتی کرتے ہوئے شہری کے گارڈ کی فائرنگ سے ہلاک، دو ساتھی ڈاکو فرار ہو گئے۔تھانہ گوجرہ کے علاقہ کھائی کے قریب تین مسلح ڈاکوؤں نے رات ایک بجے کے قریب سڑک پر ناکہ لگا رکھا تھااور راہگیروں کو لوٹنے میں مصروف تھے۔ اسی دوران انہوں نے ایک کار سوار شہری خالد کو روکا اور اسے گاڑی سے باہر آنے کے لئے کہا اور ان پر پسٹل تان لئے۔ جس پر خالد کے گن مین افتخار نے ڈاکوؤں پر فائر کھول دیا جس کی زد میں آ کر ایک ڈاکو شدید زخمی ہو گیا۔جس کے بعد ڈاکو اپنے زخمی ساتھی کواٹھا کر موقع واردات سے فرار ہو گئے اور بعدازاں اس کی موت واقع ہونے پر اس کی لاش کو پھینک کر فرار ہو گئے۔ شہری نے پولیس کو اطلاع کی جس پر پولیس تھانہ گوجرہ نے موقع پر پہنچ کر لاش کو قبضہ میں لے لیا شناخت ہونے پر معرلوم ہوا کہ ڈکیتی کے دوران ہلاک ہونے والے ڈاکو کا نام زاہد عرفان ہے اور وہ پہلے محکمہ پولیس میں ملازم تھا تاہم اس کی مجرمانہ سرگرمیوں کی وجہ سے اسے ڈیڑھ سال قبل ملازمت سے برطرف کر دیا گیا تھا۔ پولیس تھانہ گوجرہ نے نعش کو پوسٹمارٹم کے لئے ٹی ایچ کیو ہسپتال ملک وال میں بھجوا دیا ۔ پولیس تھانہ گوجرہ نے خالد کی درخواست پر ڈاکوؤں کیخلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں