پنجاب حکومت نے نئے تعلیمی سال سے جماعت اول سے میٹرک تک تعلیمی نظام انگلش میڈیم کر دیا، اردو میڈیم کا آپشن ختم

teahcer students study education
ملک وال(نامہ نگار) پنجاب حکومت نے نئے تعلیمی سال سے جماعت اول سے دہم تک تعلیمی نظام اردو میڈیم ختم کر کے انگلش میڈیم کر دیا ہے جس کیلئے پرائمری سے میٹرک تک کی سرکاری انگلش میڈیم کتب سکولوں میں پہنچا دی گئیں ہیں۔ یاد رہے کہ حکومت نے پہلے بھی تعلیمی نظام اردو کی بجائے انگلش میڈیم کیا تھا مگر طلبا اور والدین کے مطالبہ پر اردو میڈیم کا آپشن دیا گیا تھا لیکن حکومت نے اردو میڈیم کا آپشن پھر ختم کر دیا ہے ۔انگلش میڈیم نظام تعلیم پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے پنجاب ٹیچرز یونین کے رہنماؤں راجہ ذوالفقار علی، بشیر وڑائچ ، محمد ارشد ڈڈ ، نواز انجم اور انجمن تحفظ حقوق شہریا کے صدر ملک اعجازالحق مدنی نے کہا کہ حکومت کی آئے روز بدلتی پالیسیوں کی وجہ سے طلبا کا تعلیمی مستقبل تباہ ہو رہا ہے غیر ملکی زبان میں تعلیم سے نہ صرف تعلیمی شرح کم ہو گی بلکہ ملک بھی کبھی ترقی نہیں کر سکے گا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت غیر ملکی طاقتوں سے فنڈز لینے کے لالچ میں ملک کے نونہالوں سے تعلیم کا حق چھین رہے ہیں انہوں نے کہا فرانس ، جرمنی اور چین سمیت دنیا کے کئی ممالک انگلش نظام تعلیم کے بغیر ترقی یافتہ ممالک ہیں انہوں نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے مطالبہ کیا کہ اردو میڈیم کے آپشن کو فوری طور پر بحال کیا جائے ورنہ عدالتوں کا دروازہ کھٹکھٹائیں گے۔۔۔۔۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں