تھانہ ملک وال کا ایس ایچ او تبدیل ہو گیا لیکن چوری ، ڈکیتی کی وارداتیں نہ رک سکیں،شہری خوف وہراس کا شکار

choor chor arrested

ملک وال(نامہ نگار) تھانہ ملک وال کا ایس ایچ او تبدیل ہو گیا لیکن چوری ، ڈکیتی کی وارداتیں نہ رک سکیں ، نامعلوم دن دیہاڑے بغیر کسی خوف کے بھرے بازار میں موٹر سائیکل چرا کر لے جاتے ہیں شہری خوف وہراس کا شکار ہیں ۔ شہر اور گردونواح میں دکانوں ، گھروں کے سامنے موٹر سائیکلوں کی چوری ، دکانوں کی چھتیں پھاڑ کر اور تالے توڑ کر چوری اور راہزنی کی وارداتوں میں خطرناک اضافہ ہو گیا ہے ۔ ڈی پی او منڈی بہاؤالدین نے چند روز قبل ایس ایچ او کو تبدیل کر دیا مگر وارداتوں کا سلسلہ نہ رک سکا ۔ بلکہ اب مجرم اس قدر دلیر ہو چکے ہیں کہ واردات کر تے ہوئے متاثرہ شخص اگر گھر نہ ہو تو اسے فون کر کے بتاتے ہیں ۔ جبکہ پولیس کسی بھی چور ، ڈاکو کا سراغ بھی نہیں لگا سکی ۔ انجمن تحفظ حقوق شہریاں نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے مطالبہ کیا کہ چوری ڈکیتی کی وارداتوں کو روکنے کیلئے موثر کاروائی کی جائے چوروں ڈاکوؤں کی عدم گرفتاری پر متعلقہ تھانہ کا ایس ایچ او معطل کر کے اسے اس پوسٹ کیلئے نااہل قرار دیا جائے جبکہ متعلقہ ڈی ایس پی کیخلاف بھی کاروائی کی جائے ۔ ۔۔۔۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں