اجووال میں آٹھویں کے طالب علم تیرہ سالہ احتشام کی اچانک موت،علاقہ بھر میں سوگ کا سماں، ہر آنکھ اشک بار

Ehtishaam

ملک وال(نامہ نگار) اجووال کے رہائشی محمد عارف کاتیرہ سالہ بیٹا محمد احتشام جو کہ آٹھویں جماعت کے پیپر دے چکا تھا، گزشتہ روز خالق حقیقی سے جا ملا۔ معصوم بچے کی اچانک موت نے ہر آنکھ اشکبار کر دی۔ علاقہ بھر میں سوگ کا سماں رہا۔ مرحوم کی نماز جنازہ جمعہ کے روز بعد از نماز مغرب ادا کی گئی جس میں حاجی مختار احمد گوندل، طارق مختار گوندل، رفاقت مختار گوندل، حاجی سرفراز احمد پٹواری، محمد عمران گوندل، مبشر محمود جنجوعہ ایڈووکیٹ، نوجوان صحافی و کالم نگار تجمل محمود جنجوعہ، حکیم شہزادہ تصور محمود، حافظ ذوالفقار احمد، ملک محمد سرفراز، محمد رشید گوندل، امجد فاروق گوندل، طارق محمود، نواز احمد گوندل، محمد ارشد گوندل، محمد بشیر گوندل سمیت معززین علاقہ کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ بعدازاں مرحوم کو مقامی قبرستان میں سپردخاک کر دیا گیا۔ مرحوم کی رسم قل اتوار کے روز دن دس بجے اجووال میں ادا کی جائے گی۔ یاد رہے کہ چند روز قبل مرحوم بچے کے چچا ظفر اقبال کی بھی اچانک موت واقع ہوئی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں