ڈاکٹر شاہد نذیر کے قتل اور ملزموں کی عدم گرفتاری کیخلاف سرکاری و پرائیویٹ اسپتال بند، مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا

hospital pactiont mareez ill

ڈاکٹر شاہد نذیر کے قتل اور ملزموں کی عدم گرفتاری کیخلاف تحصیل بھر میں سرکاری و پرائیویٹ بند، مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا، ڈاکٹروں کی احتجاجی ریلی ۔
ملک وال(نامہ نگار) منڈی بہاؤالدین کے نجی ہسپتال میں ڈاکٹر شاہد نذیر کے بہیمانہ قتل اور ملزموں کی عدم گرفتاری کیخلاف گزشتہ روز پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کی اپیل پر تحصیل بھر کے سرکاری اور پرائیویٹ ہسپتال مکمل طور پر بند رہے۔ تحصیل ملک وال سے پی ایم اے کے رہنما ڈاکٹر محمد الیاس گوندل، ڈاکٹر منظور رسول اعوان، ڈاکٹر ظفر اقبال گوندل، ڈاکٹر احمد سبحانی بٹ، ڈاکٹر محمد اسلم سمیت دیگر ڈاکٹر ز ڈی ایچ کیو ہسپتال منڈی بہاؤالدین پہنچ گئے جہاں ڈاکٹروں نے واقعہ کیخلاف احتجاجی ریلی نکالی جس کی قیادت پی ایم اے کے ضلعی صدر ڈاکٹر طارق محمود چدھڑ نے کی ۔ احتجاجی ڈاکٹرز سے خطاب کرتے ہوئے پی ایم اے کے ضلعی صدر ڈاکٹر طارق محمود چدھڑ نے ڈاکٹر شاہد نذیر کے قتل کی شدید مذمت کرتے ہوئے پولیس حکام کو ملزموں کی گرفتاری کیلئے تین دن کی مہلت دیتے ہوئے کہا کہ اگر قاتلوں کو گرفتار نہ کیا گیا تو پھر ضلع بھر میں مکمل ہڑتال کی جائے گی سرکاری اور پرائیویٹ مکمل بند کر دیں گے ایمر جنسی میں بھی کام نہیں کریں گے۔ریلی ڈی ایچ کیو ہسپتال سے پریس کلب تک نکالی گئی جس میں انجمن تاجران، وکلا سمیت سول سوسائٹی کے نمائندوں نے بھی شرکت کی۔۔۔۔۔

اپنا تبصرہ بھیجیں