لاہور ہائیکورٹ نے تاریخی عمارتوں کے اطراف میں اورنج لائن ٹرین منصوبے پر کام سے روک دیا

lahore

لاہور ہائیکورٹ نے اورنج لائن ٹرین کی زد میں آنے والی تاریخی عمارتوں کی حدود میں کام روکنے کا حکم دے دیا دے دیا ہے ۔عدالت نے اپنے حکم میں کہا ہے کہ اورنج لائن ٹرین منصوبے کی تعمیل 11تاریخی عمارتوں سے 200فٹ دور کی جائے ۔تفصیل کے مطابق لاہور ہائی کو رٹ میں جسٹس عزیز شیخ کی سربراہی میں دورکنی بینچ نے سول سوسائٹی کی جانب سے دائر کی گئی دراخوست پر سماعت کی ۔درخواست میں اورنج لائن ٹرین منصوبے کی زد میں آنے والی تاریخی عمارتوں پر کام روکوانے کی استدعا کی گئی تھی ۔سماعت کے دوران بینچ نے دلائل سننے کے بعد عدالت نے درخواست پر حکم امتناعی جاری کرتے ہوئے شالا مار باغ ، لکشمی چوک ،جی پی او ،چوبرجی ،موج دریا ،سپریم کورٹ بلڈنگ ،بدھو کا آوا اور سینٹ اینڈ ریو چرچ سمیت مختلف تاریخی عمارتوں کے قریب اورنج لائن ٹرین منصوبے پر کام کو روک دیا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں