37

ہفتے میں 4 دن، روزانہ 6 گھنٹے کام کی تجویز

فن لينڈ کی خاتون وزيراعظم نے نئی پاليسی کا اعلان کرديا، انھوں نے ہفتے میں چار دن اور روزانہ 6 گھنٹے کام کرنے کی تجویز پیش کردی۔

فن لینڈ کی نو منتخب وزیرِاعظم سنا میرین نے ورکنگ ویک سے متعلق پالیسی میں ہفتے میں صرف چار دن اور روزانہ 6 گھنٹے کام کی تجویز پر غور کرنا شروع کردیا ہے۔

فن لینڈ کی نو منتخب وزیرِاعظم سنا میرین نے وضاحت کرتے ہوئے کہا لوگوں کا حق ہے کہ وہ اپنے پیاروں اور اہلخانہ کے ساتھ زیادہ سے زیادہ وقت گزاریں، اسی لیے کام کرنے کے گھنٹے اور دن کم کرنا چاہتی ہوں۔

ورکنگ آورز ميں کمی کرنے والے ممالک کو تجربے سے پتہ چلا ہے کہ اس طرح لوگوں کے کام کرنے کی صلاحيتيں بڑھ جاتی ہيں ۔

اس کی نسبت ہفتے ميں زيادہ کام کرنے والوں ميں قطر کا نمبر پہلا ہے، جہاں ہر ہفتے اوسطا اننچاس گھنٹے کام کيا جاتا ہے۔

جبکہ برطانیہ ، میانمار، منگولیا، بنگلہ دیش ، چین ، میکسیکو اور پاکستان ميں کام کرنے کے اوقات کار کا شيڈول ايک جيسا ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں