111

منڈی بہاوالدین: سیٹیزن پورٹل سے موصول ہونے والی4,706 شکایات میں سے 4,406 شکایات کا ازالہ کر دیا گیا۔ پرائس مجسٹریٹ آفیسرز نے 509خلاف ورزیوں پر 14لاکھ 11ہزار روپے جرمانہ کیا جبکہ 26ایف آئی آرز درج کر کے 29افراد کو گرفتار کر کے جیل بھجوایا گیا

منڈی بہاوالدین ( ایم۔بی۔دین نیوز 05 نومبر2019  ) ڈپٹی کمشنر مہتاب وسیم اظہر نے کہا ہے کہ تجاوزات کا بلا امتیاز خاتمہ اور شہری مسائل کا حل موجودہ حکومت کی اہم ترجیح ہے، ا سسٹنٹ کمشنرز صاحبان باقی ماندہ سرکاری اراضی کی واہگزاری جلد مکمل کر کے جیو ٹیگنگ کریں، ضلعی افسران وزیراعظم کی ہدایت پر عوام کی شکایات کے حل کیلئے بنائے گئے پورٹل سے موصول ہونے والی شکایات کا ازالہ جلد یقینی بنائیں، اراضی ریکارڈ سنٹر کی سروسز کا معیار بہتر بنایا جائے ،انہوں نے ریونیو افسران کو سرکاری واجبات کی وصولی کے اہداف جلد مکمل کرنے کا بھی حکم دیا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈی سی آفس میں پاکستان سٹیزن پورٹل، انسداد تجاوزات، سرکاری واجبات کی وصولی، پینڈنگ کیسز، بے نامی پراپرٹیز اور عوامی شکایات کے ازالے کے حوالے سے منعقدہ ایک اعلیٰ سطحی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو ملک غضنفر علی اعوان، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل محمد شفیق، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر فنانس اینڈ پلاننگ حافظ غلام مرتضیٰ چٹھہ، تینوں تحصیلوں کے اسسٹنٹ کمشنرز صاحبان، سی ای اوز، ڈی اوز کے علاوہ تمام محکموں کے سربراہان نے شرکت کی۔

اجلا س کو ملٹی میڈیا کے ذریعے تفصیلی بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ وزیراعظم عمران خان کی ہدایت پر عوام کی شکایات کیلئے بنائے گئے پورٹل سے موصول ہونے والی4706 شکایات میں سے اب تک4406 شکایات کا ازالہ کر دیا ہے اور286نئی رجسٹرڈ شکایات ان پراگریس ہیں۔ قیمت پنجاب پر 225شکایات میں سے 186شکایات حل کر دی گئی ہیں ۔ان شکایات کا جلد ازالہ کر دیا جائے گا۔

اسی طرح پاکستان سٹیزن پورٹل، سی ایم پورٹل اورچیف سیکرٹری ٹاسک مینجمنٹ سیل کی طرف سے موصول ہونے والی شکایات مرحلہ وار حل کی جا رہی ہیں ۔ جس پر ڈپٹی کمشنر نے پورٹل پر شکایات کو جلد از جلد حل کرکے پورٹل پر اپ ڈیٹ کرنے کی ہدایت کی ۔ انہوں نے کہا کہ ای پورٹل کا مقصد شہریوں کے مسائل کا بر وقت ازالہ ہے ضلعی افسران شہریوں کو ریلیف فراہم کرنے کیلئے ان کی شکایات کا جلد سے جلد ازالہ یقینی بنائیں۔

یہ بھی پڑھیں: سڑکیں، گلیاں، بازار اور شاہرائیں تنگ کرنے پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر کی زیر نگرانی منڈی بہاوالدین میں تجاوزات کے خلاف آپریشن شروع کر دیا گیا۔

اجلاس کو بتایا گیا کہ اب تک تینوں تحصیلوں کے اسسٹنٹ کمشنر ز صاحبان اور پرائس مجسٹریٹس نے مارکیٹوں کے 2,839دورے کر کے 509خلاف ورزیوں پر 14لاکھ 11ہزار روپے جرمانہ کیا جبکہ 26ایف آئی آرز درج کر کے 29افراد کو گرفتار کر کے جیل بھجوایا گیا ہے ۔ اسی طرح پرائس مجسٹریٹس نے پٹرول پمپوں کے دورے کر کے مختلف خلاف ورزیوں پر 10لاکھ 86ہزار روپے جرمانہ کیا گیا جبکہ 52نوزل کو سیل بھی کیا گیا ہے ۔ جس پر ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ کسی کو بھی من مانی قیمتیں وصول کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی ۔

انہوں نے کہا کہ اسسٹنٹ کمشنرز صاحبان مارکیٹوں اور سبزی منڈیوں میں پھلوں ، سبزیوں کی نیلامی کی نگرانی کیلئے قیمتوں کی باقاعدگی سے مانیٹرنگ کرائیں اور بل بورڈ پر سرکاری نرخنامے کو نمایاں جگہ پر آویزاں کریں۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ بے نامی اور مشکوک جائیدادوں کے متعلق 210کیسز ایف بھی آر کو بھجوائے گئے ہیں اور مزید تلاش کئے جارہے ہیں۔ جس پر ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ بے نامی جائیدادوں کا سراغ لگانے کیلئے سرکاری افسران ،میڈیا ،سول سوسائٹی اور دیگر مختلف طبقات کا تعاون ضروری ہے تاکہ حکومت کے ویژن کے مطابق کرپشن فری پاکستان کی تکمیل ہو سکے۔

یہ بھی پڑھیں: بے نامی اور مشکوک جائیدادوں کے متعلق اب تک 210کیسز ایف بی آر کو بھجوائے گئے ہیں۔ مزید کیسز کی نشاندہی کا عمل تیزی سے جاری ہے۔ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر

انہوں نے مذید کہا کہ تجاوزات کا بلا امتیاز خاتمہ شہری مسائل کا حل موجودہ حکومت کی اہم ترجیح ہے۔ اسسٹنٹ کمشنرز صاحبان باقی ماندہ سرکاری اراضی کی واہگزاری ، سٹیٹ لینڈ کی ڈائریکٹری اور جیو ٹیگنگ بھی جلد مکمل کریں۔ڈپٹی کمشنر نے پینڈنگ کیسز اور تاوان ریکوری کو جلد سے جلد حل کر نے اور بلاک کھیوٹ کو 10دن میں حل کر نے کی بھی ہدایت کی ۔

مہتاب وسیم اظہر نے کہا کہ اراضی ریکارڈ سنٹر کی سروسز کا معیار بہتر بنایا جائے تا کہ بہترین سروس کی بدولت اس سسٹم پر لوگوں کو اعتماد مضبوط ہو۔انہوں نے میرج ہالوں میں ون ڈش کی پابندی پر بھی زور دیا۔ڈپٹی کمشنر نے محکمہ ماحولیات کو بغیر ٹریٹمنٹ کے دھواں چھوڑنے والے ، فضائی آلودگی اور سموگ کا باعث بننے والے کارخانوں، فیکٹروں اور بھٹہ مالکان کے خلاف کاروائی عمل میں لانے کی ہدایت کی۔ انہوں نے کہا کہ حکومتی ہدیات کے مطابق عوام کو ریلیف مہیا کرنے کیلئے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں گے اور اس حوالے سے کوئی کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں