72

گورنمنٹ زراعتی سیڈ فارم چیلیانوالہ میں نئی عمارت کا افتتاح. ڈائریکٹر جنرل توسیع زراعت کا کسانوں سے خطاب

منڈی بہاﺅ الدین ( ایم بی ڈین نیوز 11 اپریل 2019 ) ڈائریکٹر جنرل توسیع زراعت وایڈاپٹیو ریسرچ پنجاب ڈاکٹر انجم علی بٹر نے کہا ہے کہ حکومت زرعی شعبے کو منافع بخش سیکٹر بنانے کیلئے تمام وسائل بروئے کار لا رہی ہے۔ کسان زرعی پیداوار میں اضافے کیلئے جدید ٹیکنالوجی ،آلات مشینری کے علاوہ ریسرچ شدہ بیج استعمال کریں اوراپنے بچوں کو تعلیم کے ساتھ اس شعبے کو بھی اپنانے کی ترغیب دیں۔انہوں نے کہا کہ محکمہ زراعت کسانوں کے تعاون سے زرعی شعبے کو عروج دلانے کیلئے پوری طرح کوشاں ہے تاکہ کاشتکار اپنے پیشے پر فخر کر سکیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں گورنمنٹ زراعتی سیڈ فارم چیلیانوالہ میں نئی عمارت کے افتتاح کے بعد کسانوں سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر فنانس رانا ضیاءاللہ، ڈائریکٹر زراعت ، ڈپٹی ڈائریکٹر توسیع زراعت محمد اقبال سمیت دیگر متعلقہ محکموں کے افسران بھی موجود تھے۔

قبل ازیں ڈپٹی ڈائریکٹر زراعت توسیع محمد اقبال نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ 250ایکڑ ملکیتی رقبہ پر مشتمل اس زرعی سیڈ فارم پر 3 فصلات ،گندم ، دھان اور گنا باقاعدگی سے کاشت کئے جاتے ہیں۔ یہ فارم صوبے بھر میں اپنی کارکردگی کے حوالے سے اولین مقام رکھتا ہے۔ اس کا بنیادی مقصد عام علاقائی فصلوں کیلئے تصدیق شدہ بیج پیدا کرنا ہے۔

جو بعدازاں حکومتی ذرائع سے کاشتکاروں تک بہم پہنچائے جاتے ہیں۔ اس موقع پر ڈی جی توسیع زراعت ڈاکٹر انجم علی بٹر نے کہا کہ محکمہ زراعت سے وابستہ بیشتر افسران و ماتحت عملے کا تعلق دیہی علاقوں سے ہے جو اپنے زرعی پیشے اور محکمہ سے دلی لگاو رکھتا ہے اور حکومتی ہدایت کے مطابق کسانوں کیلئے مقرر کی جانے والی سہولیات کی فراہمی کیلئے دن رات کوشاں ہے۔بالخصوص تحقیق کے شعبے میں خود مختاری اور وسائل کی فراہمی کیلئے موجودہ حکومت کی طرف سے قابل قدر اور لائق تحسین اقدامات اٹھائے جارہے ہیں۔جن سے فائدہ اٹھا کر کاشتکار حضرات اپنی خواہش کے مطابق اپنی پیدوار کو منافع بخش بنا سکتے ہیں۔

بعدازاں انہوں نے سیڈ فارم کے لان میںکلین اینڈ گرین پاکستان مہم کے تحت پودا بھی لگایا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں