49

ضلع منڈی بہاؤالدین میں قربانی کے جانوروں کے تین سیل پوائنٹس قائم، جہاں محکمہ لوکل گورنمنٹ کی معاونت سے لائیو سٹاک اور محکمہ صحت کے اسٹال کے علاوہ تمام متعلقہ سہولیات دستیاب ہونگی

منڈی بہاؤالدین ( ایم بی ڈین نیوز ) ڈپٹی کمشنر مہتاب وسیم نے کہا ہے کہ ضلع منڈی بہاؤالدین میں قربانی کے جانوروں کے تین سیل پوائنٹس قائم کر دئیے گئے ہیں۔جہاں محکمہ لوکل گورنمنٹ کی معاونت سے لائیو سٹاک اور محکمہ صحت کے اسٹال کے علاوہ تمام متعلقہ سہولیات دستیاب ہونگی۔سیل پوائنٹ پر فل پروف سیکورٹی کو یقینی بنایا جائیگا۔کالعدم تنظیموں کو قربانی کی کھالیں جمع کرنے کی اجازت نہیں ہوگی۔خیراتی تنظیموں کو متعلقہ ڈپٹی کمشنر کی اجازت سے کھالیں جمع کرنے کی مشروط اجازت ہوگی۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے منڈی بہاؤالدین میں عیدالضحیٰ کے موقع پر قربانی کے جانوروں کے سیل پوائنٹ کے قیام کے حوالے سے ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو طارق نیازی، اسسٹنٹ کمشنر کوآرڈینیشن شاہد محبوب، اسسٹنٹ کمشنر منڈی بہاؤالدین حافظ سلمان، اسسٹنٹ کمشنر پھالیہ رانا جمیل، اسسٹنٹ کمشنر ملکوال راجہ محمد سلیم، سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر محمد علی مفتی،ایڈیشنل ڈائریکٹر لائیو سٹاک ڈاکٹر ممتاز بیگ،ڈپٹی ڈائریکٹر لوکل گورنمنٹ ظفر محمود گوندل، ڈپٹی ڈائریکٹر سوشل ویلفیئر عاطف علی وڑائچ اور سی ای اوز میونسپل کمیٹیزبھی شریک تھے۔
یہ خبر بھی پڑھیں
صفائی مہم کے ساتھ ساتھ ناجائز تجاوزات کو ہٹانے اور شہر کو صاف ستھرا رکھنے کیلئے ہم سب کو اپنا کلیدی کردار ادا کرنا ہو گا تا کہ ضلع بھر کے 12لاکھ عوام صاف ستھرے ماحول میں رہ سکیں، ڈپٹی کمشنر

ڈپٹی کمشنر مہتاب وسیم نے کہا کہ عیدالضحیٰ کے موقع پر عوام الناس کی سہولت کیلئے ضلع میں قربانی کے جانوروں کے تین سیل پوائنٹس منڈی بہاؤالدین، ملکوال اور پھالیہ میں قائم کئے گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے مقررکردہ جگہوں پر ہی قربانی کے جانوروں کی خریدوفروخت کی اجازت ہوگی۔جانوروں کی غیر قانونی جگہوں پر خریدو فروخت جگہوں پر خرید و فروخت کرنے پابندی ہوگی اور خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف قانونی کاروائی عمل میں لائی جائیگی۔
یہ خبر بھی پڑھیں
ڈپٹی کمشنر مہتاب وسیم نے قربانی کے جانوروں کے غیر قانونی سیل پوائنٹس کے خلاف کاروائی کرنے کا حکم دے دیا

انہوں نے کہا کہ محکمہ لوکل گورنمنٹ کی معاونت سے میونسپل کمیٹی ،محکمہ لائیوسٹاک اور محکمہ صحت کا عملہ تمام سیل پوائنٹس پر صفائی ستھرائی سمیت پانی کے چھڑکاؤ ،چارے سمیت دیگر انتظامات کرنے کا ذمہ دار ہوگاجبکہ محکمہ لائیو سٹاک ناصرف اپنا اسٹال قائم کرئے گا بلکہ سیل پوائنٹ پر فروخت کیلئے لائے جانے والے جانوروں کے علاج ،ویکسینشن اور کانگووائرس کی روک تھام کیلئے ضروری اقدامات کریگا۔ محکمہ صحت بھی سیل پوائنٹس پر اپنا اسٹال قائم کریگا۔

انہوں نے کہا کہ سیل پوائنٹ پرفل پروف سیکورٹی کے خصوصی انتظامات کئے جائینگے ۔جبکہ سی سی ٹی وی کیمروں کے ذریعے نہ صرف نگرانی کی جائیگی بلکہ باہر سے آنے والے افراد کی سخت تلاشی بھی لی جائیگی۔انہوں نے کہا کہ کالعدم تنظیموں کو خواہ وہ نئے نام سے بھی ہوں قربانی کی کھالیں جمع کرنے کی اجازت نہیں ہوگی تاہم خیراتی ادارے اور فلاحی تنظیمیں متعلقہ ڈپٹی کمشنر کو رجسٹریشن سرٹیفکیٹ کے ہمراہ باقاعدہ درخواست دینگی اور اس کے ساتھ پچھلے سال کا اجازت نامہ یا این او سی بھی منسلک کرکے اجازت حاصل کرینگی۔تاہم خیراتی تنظیمیں تحریری حلفیہ بیان بھی دینگی کہ ان کا کسی کالعدم تنظیم سے تعلق نہیں ہے۔ڈپٹی کمشنر تین دن میں فیصلہ دینگے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں