59

ڈاکٹر اور پیرا میڈیکل سٹاف کے مشفقانہ رویے سے مریضوں کی جلد صحتیابی کے امکانات بڑھ جاتے ہیں۔ اگر طب کا شعبہ مسیحائی جذبے سے کام کرے تو مسائل ان کے راہ کی رکاوٹ نہیں بن سکتے

منڈی بہاؤالدین ( ایم بی ڈین نیوز ) ڈپٹی کمشنر منڈی بہاؤالدین مہتاب وسیم نے کہا ہے کہ ہسپتالوں میں ڈاکٹر اور پیرا میڈیکل سٹاف کے مشفقانہ رویے سے مریضوں کی جلدصحتیابی کے امکانات بڑھ جاتے ہیں۔ سروسز کے اعلیٰ معیار کیلئے ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل سٹاف کو اپنی ذمہ داری قومی جذبے سے سر انجام دینا ہو گی۔ اگر طب کا شعبہ مسیحائی جذبے سے کام کرے تو مسائل ان کے راہ کی رکاوٹ نہیں بن سکتے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈی سی آفس میں محکمہ صحت کے زیر اہتمام ڈاکٹر ز اور ڈی ایچ کیو ہیلتھ کونسل کے ساتھ منعقدہ ایک خصوصی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر محمد علی مفتی، ڈی ایچ اوز ڈاکٹر حافظ افتخاراحمد، ڈاکٹر فضل اعوان، ایم ایس ڈی ایچ کیو ڈاکٹر شکیل اقبال بٹ، ڈاکٹرز اور ہیلتھ کونسل کے اراکین بھی شریک تھے۔
یہ خبر بھی پڑھیں
صفائی مہم کے ساتھ ساتھ ناجائز تجاوزات کو ہٹانے اور شہر کو صاف ستھرا رکھنے کیلئے ہم سب کو اپنا کلیدی کردار ادا کرنا ہو گا تا کہ ضلع بھر کے 12لاکھ عوام صاف ستھرے ماحول میں رہ سکیں

انہوں نے کہا کہ شعبہ صحت اور تعلیم میری خصوصی توجہ کا مرکز ہیں اور ان شعبہ جات کی ترقی کیلئے ہر ممکن اقدامات اٹھائے جائینگے۔ انہوں نے کہا کہ ہم سب نے خداکو جواب دینا ہے اور ہسپتالوں میں علاج معالجہ کیلئے آنے والے مریضوں کے ساتھ ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل سٹاف کا مشفقانہ رویہ ہمارے لئے خداکی بے شمار نعمتوں ،رحمتوں کا باعث بن سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ دیانتداری ، ایمانداری ،جذبہ حب الوطنی اور لگن کے ساتھ کام کیا جائے تو مسائل رکاوٹ نہیں بن سکتے۔انہوں نے کہا کہ آپ مسیحائی شعبے سے تعلق رکھتے ہیں اور ہسپتال میں آنے والے علاج معالجہ کے مریضوں کیلئے ڈیلیور کریں اور ان کا علاج محبت اور پوری توجہ سے کریں۔ہسپتالوں میں مریضوں کے ساتھ غلط رویہ ہرگز برداشت نہیں کیا جائیگا۔

انہوں نے کہا کہ کے بغیر کسی تخصیص کے ہسپتال انتظامیہ ،ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل سٹاف کا فرض ہے کہ دستیاب طبی آلات کو تسلسل کے ساتھ آپریشنل حالت میں رکھیں اور صفائی کے نظام کی کڑی نگرانی کریں تاکہ ہسپتال صیح معنوں میں شفاء دینے والے شفاء خانے نظر آئیں۔بعدازاں انہوں نے ہیلتھ کونسل کے اراکین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وہ اگلے اجلاس تک ہسپتال میں افرادی قوت ،طبی آلات ،مشینری اور دیگر طبی سہولیات کی فراہمی ،اخراجات کے قواعد و ضوابط کے حوالے سے ایک تفصیلی رپورٹ پیش کریں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں