71

مذہبی تے سیاسی بریانی، تحریر ندیم اختر

مذہبی تے سیاسی بریانی

اکتوبر 1993 کے دن ہیں. ہم اپنے بچپن کے دن گزار رہے ہیں. قاضی صاحب کا نعرہ ظالموں قاضی آ رہا ہے کانوں میں رس گھول رہا تھا. آڈیو کیسٹ کا دور دورہ تھا اس زمانے میں.. اس وقت کے تحریکی گاؤں ڈھوک کاسب میں گھر گھر ٹیپ ریکارڈر پر یہ نعرہ گونج رہا تھا میرے گھر میں بھی سرخ رنگ ٹیپ ریکارڈر کو بھی یہ موقع ملا تو ہر ٹائم ظالموں قاضی آ رہا ہے ذہن نشین ہو گیا..

ظالم کیا ہوتا ہے اس وقت مجھے پتا نہیں تھا. مرکزی دارہ میں مجھے اپنے بڑوں سے پتہ چلا پاکستان اسلامک فرنٹ کا جلسہ ہو رہا ہے. جلسوں سے تعارف تو تھا ہی.لیکن سیاسی جلسہ پہلا تھا. جلسہ ختم ہوا تو میرے گاؤں کے لوگ دارہ کی چھنی کی طرف دوڑتے نظر آئے انجان تھے گھر کو چل دیئے دارہ سے نکل رہا تھا تو اندر جلیبیوں پر نظر پڑی بس دوڑ لگا دی کچھ حصہ مل. ہی گیا.

یہ میرا پہلا تعارف تھا سیاسی کھانے کا. بس پھر کیا کوئی ایسا جلسہ نہ چھوڑا..
اس وقت کی مسلم لیگ جلسہ جو گرلز ہائی سکول ڈھوک نواں لوک میں جلسے کا اعلان گاڑیوں پر سپیکر لگا کر کر رہے تھے.. جلیبی کا دور دورہ تھا اس وقت.
محترمہ کی پاٹی بھی کسی سے ڈھکی چھپی نا تھی. ہر پارٹی میں بریانی جلیبی کا رواج موجود تھا.

1997 کے الیکشن میں مسلم لیگ ن وجود میں نہیں آئی تھی لیکن اس وقت تک جلیبی کا تبادلہ چاولوں کی سے ہو چکا تھا. 2002 میں ایم ایم اے وجود میں آیا آچکی تھی. مسلم لیگ ق کا تازہ تازہ جنم ہوا تھا اور مسلم لیگ نون کو لون لگنا ابھی باقی تھا.

بریانی کھانے کی عادت لوگوں میں پروان چڑھ رہی تھی ان کے نظریات وفات پانا شروع ہو گئے تھے جو جتنی اچھی بریانی کھلا دیتا اپنی حکومت بناتا.. چلتے چلتے 2018 کی بات کرتے ہوئے ہے. اب تو سیاسی اور مذہبی جلسوں کی بنیاد ہی بریانی پر رکھی جا سکتی رہی ہے.. پی ٹی آئی جلسوں کا اکٹھ دیکھا تو چاولوں کی خوشبو ادھر لے گئی.

ن لیگ کو کارنر میٹنگز میں اور جلوس میں دیگیں کم ہوتے دیکھیں. اور ایم ایم اے کے جلسے میٹھے سے بھرپور سنے..
اب بڑے ہوگئے بچے جوان ہو گئے ہمیں چاولوں کی خوشبو کے ساتھ ساتھ باقاعدہ مرغی کا گوشت بھی کھانے کو جی کرتا ہے.. سیاسی تو دور کی بات اب ہمارے مذہبی اشتہار بھی یہ ترغیب دیتے ہوئے نظر آتے ہیں کہ کھانے کا وسیع انتظام ہو گا.

اب ہم مذہب بھی بریانی پر چلاتے ہیں اور سیاسی باوے تو ہیں ہی بریانی کی پلیٹ پر بکنے والے..

نظریاتی لوگ ختم چکے بریانی لوگ شروع ہو چکے اب پارٹی کی شرط بریانی سے مشروط ہو چکی. پلیز ایک پلیٹ بریانی اور.. فیر میں منڈی جانا

 تحریر:

محمد ندیم اختر

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں