44

ڈپٹی کمشنر منڈی بہاؤالدین حافظ شوکت علی نے حکومت پنجاب کے تعاون سے تعمیر ہونے والے رینجر کالونی روڈپر قائم پاکستان کڈنی اینڈ لیور انسٹی ٹیوٹ کا دورہ کیا

منڈی بہاؤالدین ( ایم بی ڈین نیوز )ڈپٹی کمشنر منڈی بہاؤالدین حافظ شوکت علی نے حکومت پنجاب کے تعاون سے تعمیر ہونے والے رینجر کالونی روڈپر قائم پاکستان کڈنی اینڈ لیور انسٹی ٹیوٹ کا دورہ کیا۔ انہوں نے آئی ٹی لیب،سٹور روم، ویٹنگ روم کا معائنہ کر کے ادویات کا سٹاک بھی چیک کیا۔ اسسٹنٹ کمشنر منڈی بہاؤالدین شبیر حسین چیمہ بھی ان کے ہمراہ تھے۔اس موقع پر ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ پنجاب حکومت کا کروڑوں روپے کے بجٹ کی فراہمی کا مقصد شہریوں کو صحت عامہ کی بہترین سہولتوں کی فراہمی یقینی بنانا ہے۔حکومتی اقدامات سے عوام کا سرکاری ہسپتالوں پر اعتماد بڑھا ہے۔ صرف سہولتوں کی موجودگی کافی نہیں بلکہ رویوں کو تبدیل کرنا ہو گا۔وزیر اعلیٰ شہباز شریف جتنے وسائل اس وقت ہیلتھ سیکٹر پر خرچ کر رہے ہیں اس کی ماضی میں مثال نہیں ملتی۔ہسپتالوں کے لئے جتنے فنڈز مانگے جائیں فوراً مل جاتے ہیں۔صحت پر اتنے زیادہ فنڈز خرچ کرنا اس بات کا واضح ثبوت ہے کہ حکومت شعبہ صحت کو کتنی زیادہ اہمیت دیتی ہے۔ آج طبی سہولتوں کے باعث زیادہ آمدنی والے افراد بھی سرکاری ہسپتالوں کو رخ کر رہے ہیں۔اس موقع پر پراجیکٹ ڈائریکٹر غلام مرتضیٰ نے بتایا کہ پنجاب حکومت کے تعاون سے قائم پی کے ایل آئی ہسپتال میں ہیپاٹائٹس بی اور سی کی سکریننگ، حفاظتی ویکسین، ٹیسٹ اور ادویات مفت فراہم کی جاتی ہیں۔ ہسپتال میں روزانہ 80مریض دیکھنے کی گنجائش موجود ہے۔انہوں نے کہا کہ صوبے میں ہر ساتواں شخص ہیپاٹائٹس کا شکار ہے۔ احتیاطی تدابیر اختیار کر کے اس موذی مرض سے بچا جا سکتا ہے۔ سکولوں، کالجوں میونسپل کمیٹیوں اور ضلع کونسل لیول پر آگاہی مہم چلائی جائے گی اس حوالے سے میڈیا بھی اہم رول ادا کر سکتا ہے۔ غلام مرتضیٰ نے اپیل کی کہ جب مریض ڈاکٹر کے پاس جائیں تو نئی سرنج کا استعمال کریں۔دانت صفائی کے لئے مستند ڈاکٹر کے پاس جائیں کیونکہ غیر تسلی بخش اوزار کے استعمال سے ہیپاٹائٹس کے پھیلنے کا خطرہ موجود ہوتا ہے۔
٭٭٭٭٭٭

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں