58

سبزی اور فروٹ منڈیوں کے مالکان نے عید کی آمد سے قبل پھلوں اور سبزیوں کی قیمتیں بڑھا دیں

ملک وال(نامہ نگار) ملک وال شہر میں موجود ایک درجن کے قریب سبزی اور فروٹ منڈیوں کے مالکان نے عید الاضحی کی آمد کے قریب ہوتے پھلوں اور سبزیوں کی قیمتوں میں تیس سے پچاس فیصد تک اضافہ کر دیا ہے جس سے عام آدمی کے لئے خریداری میں مشکلات کا سامنا ہو رہا ہے،ذرائع کا کہنا ہے کہ عام روٹین میں منڈیوں میں پھلوں اور سبزیوں کی بولی لگا ئی جاتی ہے اور دکاندار اپنی مرضی کی بولی دے کر سامان خریدتا ہے لیکن عید قریب آتے ہی منڈیوں کے مالکان نے بولی سسٹم ختم کر دیا ہے اور خصوصاً پھلوں کی اپنی مرضی سے قیمتیں مقرر کر دی ہیں اور دوکانداروں کو مجبور کیا جاتا ہے کہ اسی قیمت پر خریداری کی جائے ،اس صورت حال کے تحت مارکیٹ میں انگور اور سیب کی قیمت میں ایک دم سے پچاس سے ساٹھ روپئے فی کلو اضافہ ہو گیا ہے اور دو تین روز قبل 100 روپئے فی کلو بکنے والا انگور اور سیب 150 روپئے تک جا پہنچا ہے،اسی طرح آڑو 80 روپئے سے 120 روپئے فی کلو،آم 140 سے 200 روپئے اور کیلا بھی 50 روپئے فی درجن سے 80 روپئے تک پہنچا دیا گیا ہے۔اس حوالہ سے مارکیٹ کمیٹی،اسسٹنٹ کمشنر،چیئرمین بلدیہ،پرائس کنٹرول مینجمنٹ اور ڈی سی سمیت تمام متعلقہ ذمہ داران بے بس نظر آتے ہیں۔اسی طرح سبزیوں خصوصاً پیاز ،آلو،ٹماٹر،ادرک،ہری مرچ کی قیمتیں بھی عید کے پیش نظر بڑھا دی گئیں اور پیاز 70 روپئے فی کلو، آلو70 روپے فی کلو، ٹماٹر 100 روپے، ادرک 160 روپے،گوبھی 80 روپئے فی کلو تک جا پہنچی ہے حالانکہ چند روز قبل سبزیوں کی قیمتیں تقریباًآدھی تھیں، واضع رہے کہ دوکاندار بھی اس موقع سے بھر پور فائدہ اٹھا رہے ہیں اور ریٹ لسٹوں سے بھی زائد قیمتوں پر اشیاء بیچ رہے ہیں۔شہریوں نے کمشنر گوجرانوالہ سے مطالبہ کیا ہے کہ مارکیٹ میں پھلوں اور سبزیوں کی قیمتیں توازن میں کروائی جائیں اور گراں فروشوں کے خلاف کاروائی کی جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں